کعبہ میرے پیچھے سے اقتباس

Discussion in 'Urdu Adab' started by intelligent086, Apr 1, 2019.

  1. intelligent086 FK Lover FK Lover Member Of The Month

    Messages:
    22,556
    Likes Received:
    2,639
    Trophy Points:
    98
    ۔پاکستان لوٹ جانے میں جو بھی وجوہات مانع تھیں، اپنی جگہ، لیکن امریکہ میں بھی میرا دم گھٹنے لگا۔ وہاں میری اندر کی زندگی ایسی تھی جیسے مکڑی کا جالا ہوا میں تیرتا ہو… کشتی کی ٹوٹی پتوار بے کراں سمندر پر بے مقصد پھرتی ہو… میں لمحے سے لمحے تک… دن کو دن سے، سالوں کو نئے سال سے جوڑتا رہا۔ امریکہ صرف ضروریات زندگی کو پورا کرنے کا سفر تھا۔ ضروریات بڑھ رہی تھیں، ان کے لئے جدوجہد اور بھی روز افزوں تھی۔ دن ہفتے، مہینے، سال معیارِ زندگی کو بہتر بنانے کی نذر ہوتے رہے۔ پاکستان میں میرا جسم نا آسودہ تھا، امریکہ میں روح تشنہ رہنے لگی۔ ہولے ہولے اس تشنہ روح نے سوال پوچھنا شروع کر دئیے… کیا میں دنیا میں صرف زیادہ کمفرٹس فراہم کرنے کے لئے لایا گیا ہوں؟ مجھے کیا کرنا ہے؟ کس کے لئے کرنا ہے اور پھر کیوں کرنا ہے؟ (کعبہ میرے پیچھے سے اقتباس
     
  2. Maria ηεωвιε ηεωвιε Fk Member

    Messages:
    257
    Likes Received:
    81
    Trophy Points:
    28
    intelligent086 likes this.
  3. intelligent086 FK Lover FK Lover Member Of The Month

    Messages:
    22,556
    Likes Received:
    2,639
    Trophy Points:
    98
    پسند اور رائے کا شکریہ
     

Share This Page